تارکین وطن نے محنت سے اپنی جگہ بنائی ہے انکی خدمات قابل ستائش ہیں۔ فواد آحیدار
مقامی قوانین کا اخترام اور معاشرتی و ثقافتی اقدار سے ہم آہنگی ہماری ترجیح ہونی چاہئے۔ بیرسٹر گل نوز خان۔
برسلز (ڈیلی پیغام) برسلز پارلیمنٹ کے سینئر نائب صدر فواد آحیدار اور ای یو پاک فرینڈشپ فیڈریشن یورپ کے چیئرمین چوہدری پرویز اقبال لوہسر نے باہمی اشتراک سے ایک شاندار اور معلوماتی سیمینار کا انعقاد برسلز پارلیمنٹ کے مین ہال میں کیا، جس میں بیورو چیف دنیا نیوز یو کے یورپ اظہر جاوید، بیرسٹر گل نواز خان، مقامی سیاستدانوں کے علاوہ پاکستانی، ترکش اور مراکش کمیونٹی کے نمائیندوں نے شرکت کی۔  سیمینار کی صدارت ای یو پاک فرینڈشپ فیڈریشن یورپ کے چیئرمین چوہدری پرویز اقبال لوہسر نے کی جس کا موضوع برسلز میں پاکستانی اور دیگر بین القوامی تاجرران کے حالات تھا۔  اس موضوع پر مقررین نے اپنے خیالات کا بھر پور انداز میں اظہار کیا اور اپنے تجربات کی روشنی میں اپنی کاروباری مشکلات، کامیابیاں ، سہولتیں  اور کاروباری مواقعوں پر بھی اظہار خیال کیا۔ اور مقررین کا کہنا تھا کہ تارکین وطن مقامی اور یورپی معیشت میں اہم کردار ادا کر رہے ہیں، مقامی معاشرتی  زندگی میں اپنی محنت و جفا کشی سے عزت کی نگاہ سے دیکھے جاتے ہیں اور معاشرہ میں مثبت کردار ادا کر رہے ہیں۔ برسلز پارلیمنٹ کے  سینئر وائس صدر فواد آحیدار نے اپنے خطاب میں کہا کہ برسلز میں کاروباری تارکین وطن کی شرح پچاس فی صد ہے انھوں نے بڑی محنت سے کاروباری شعبہ میں اپنی جگہ بنائی جو کہ بلجیم کی معیشت میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتی ہے۔ انھوں نی کہا کہ ہم ہمہ وقت کاروباری طبقہ کیلئے بھی آسانیاں پیدا کرنے کی کوشش کرتے رہتے ہیں تاکہ معیشت ترقی پکڑے اور ملازمتوں کے مواقع بھی بڑھیں۔ 
پوست ورثا کے صدر اینڈی ورموت   نے کہا کہ پاکستان ایک امن پسند ملک ہے جس کی دہشت گردی کے خلاف قربانیوں کو فراموش نہیں کیا جا سکتا،  انھوں نے پاکستان میں حالیہ خود کش حملوں پر فتوہ کا  زکر کرتے ہوئے کہا  کہ اسلام خود کش حملوں کی اجازت نہیں دیتا اور اٹھارہ سو علما کی جانب سے اس فتواہ کی حمایت اس بات کا واضع ثبوت ہے کہ پاکستان دہشت گردی اور انتہا پسندی کی حمایت نہیں کرتا۔ اینڈی ورموت نے ووئی آر برسلز  کا فلگ سگاف نعرہ بھی لگایا جس کا جواب  تمام شعرکا نے بلند آواز میں دیا۔ 
بیرسٹر گل نواز خان نے اپنے خطاب میں پاک آرمی اورعوام کی دہشت گردی اور انتہا پسندی کے خلاف دی گئی قربانیوں پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ پاکستان نے دہشت گردی کو جڑ سے ختم کرنے کا عزم کیا ہوا ہے  مغرب  کو اسکی تعریف کرنی چاہئے اور پاکستان کے ساتھ تجارتی تعلقات کوفروغ دینا چاہئے، انھوں نے برسلز پارلیمنٹ میں انگریزی زبان کی ترویج پر بھی زور دیا۔
ای یو پاک فرینڈشپ فیڈریشن یورپ کے چیئرمین چوہدری پرویز اقبال لوہسر نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ہماری کوشش ہے کہ پاکستانی کمیونٹی کے تمام شعبوں کو فعال اور متحرک رکھا جائےدوسری قمیتوں سے ہم آہنگی پیدا کی جائے اور پاک وطن  کے ساتھ جڑے رہتے ہوئے بلجیم سے گہری وابستگی کو فروغ دیا جائے تاکہ ہماری آئندہ نسلیں اپنے دلوں میں پاکستان اور بلجیم کیلئے یکساں محبت کے جزبات رکھتی ہوں۔  
جن دیگر مقررین نے خطاب کیا  ان میں برسلز پارلیمنٹ کے ممبر جیف وان ڈیم، مادام ہیومن، پروفیسر ڈاکٹر خشام عبدالکریم، انیس سیمن، شیخ شکیل اور ملک پرویز رشید شامل ہیں۔ واضع رہے کہ اس سیمینار میں پاکستانیوں کی کثیر تعداد نے شرکت کی اور بلجیم کے سیاسی، معاشی، معاشرتی اور ثقافتی نظام پر بھرپور اعتماد اور اطمینان کا اظہار کیا جس نے ان کو وسیع القلبی سے ترقی کے مواقع فراہم کیئے۔
Please follow and like us: