البلد ایئر بیس پر امریکی فوجی مقیم ہیں اور ایک طیارہ بھی موجود ہے، فوٹو : فائل

 بغداد: عراق میں امریکی فوجیوں کے زیر استعمال ایئر بیس پر راکٹ حملے میں 4 مقامی اہلکار زخمی ہوگئے جن میں سے 2 کی حالت نازک بتائی جارہی ہے۔

بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق عراقی فضائیہ کے البلد ایئر بیس‘ پر نامعلوم جانب سے 8 راکٹ داغے گئے ہیں، اس ایئر بیس پر امریکی فوجی بھی مقیم تھے اور فضائی کارروائیوں کے لیے اس بیس کو استعمال کیا کرتے تھے۔

عراقی فوج کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ راکٹ حملوں میں 4 افراد زخمی ہوئے ہیں جن میں سے 2 عراقی فضائیہ کے آفیسر اور 2 ایئرمین ہیں۔ دو زخمیوں کی حالت تشویشناک ہے جب کہ ایئربیس کو بھی نقصان پہنچا ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے نے امریکی حکام کے حوالے سے دعویٰ کیا ہے کہ حملے کے وقت اس ایئر بیس پر صرف 15 امریکی فوجی اور ایک طیارہ موجود تھا جو مکمل طور پر محفوظ ہیں۔ کشیدگی کے بعد سے امریکی فوجیوں کو محفوظ مقام پر منتقل کیا جا چکا ہے۔

البلد عراق کے ایف-16 طیاروں کا مرکزی ایئر بیس ہے، ان طیاروں کی اپ گریڈیشن کے لیے امریکی فوجی بھی کیمپ میں ہی مقیم ہیں۔ قبل ازیں اس بیس پر ایک حملے میں عراقی فوج کے اہلکاروں سمیت ایک امریکی کنڑیکٹر بھی ہلاک ہوچکا ہے.

Please follow and like us: