جنرل قاسم سلیمانی کی شہادت امت مسلمہ کے لیے پیغام ہے کہ طاغوتی طاقتیں مسلمانوں کو صفحہ ہستی سے مٹانے کا عہد کر چکی ہیں

امام بارگاہ جعفریہ آرگنائزیشن پیری ستیری میں سپاہ قدس کے عظیم سپہ سالار جنرل قاسم سلیمانی شہید کے درجات کی بلندی کے لیے روحانی محفل میں مومنین ومومنات، سماجی، مزہبی ،سیاسی شخصیات اور پاکستان کمیونٹی کی کثیر تعداد کے علاوہ یونان کی صحافیوں نے بھی بھرپور شرکت کی ۔
ایران کے عظیم سپہ سالار جنرل قاسم سلیمانی کی شہادت کے حوالے سے جعفریہ آرگنائزیشن پیری ستیری میں انکے درجات کی بلندی کے لیے روحانی محفل کا اہتمام کیا گی

ا حمدوثنا کے بعد خطیب اختر موسوی۔ضمیر شیرازی ۔علامہ محمد عباس نے خطاب کرتے ہوئے فرمایا عالم اسلام کو باہمی اختلافات بھلا کر امت مسلمہ کے اتحاد کے لیے سوچنا چاہیے وقت ان پہنچا ہے کہ اپنی صفوں میں اتحاد پیدا کریں نہیں تو تاریخ میں ہمارا نام ونشان تک نہیں رہے گا ایران نے جس جرت سے امریکہ کو للکارا ہے اس سے یہ بات ثابت ہوگی ہے کہ حق کی آواز بلند کرنے والے ابھی اس دنیا میں موجود ہیں امریکہ کے سامان و حرب و ضرب سے متاثر نہ ہوں مسلمانوں کی تاریخ یہ ہے کہ جنگ بدر میں ہزاروں کے مقابلے میں تین سو تیرہ نے ڈٹ کر مقابلہ کیا اور فتح نے ان کے قدم چومے روحانی محفل کے اختتام پر جنرل قاسم سلیمانی صدر جعفریہ آرگنائزیشن سید فدا حسین شاہ مرحوم اور انکی اہلیہ مرحومہ کے درجات کی بلندی عالم اسلام کی سلامتی کے لیے دعا کی گئی حاضرین محفل کے لیے لنگر شریف کا زبردست اہتمام بھی کیا گیا تھا

Please follow and like us: